مصنف کی تحاریر : قاری محمد عبدالرحیم

اسلامی نظام ۔۔۔۔”عامرکاکازئی کے جواب میں”

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

عامر کاکازئی صاحب نے ”اسلامی نظام ۔سراب کے تعاقب میں“کے عنوان کے نام سے کالم لکھا،جس میں ایک سوال لکھا ”اسلامی نظام بطورِ نظام پچھلے دوہزار سال سے کس ملک میں رائج تھا“توعرض ہے کہ اسلام کودنیا میں آئے ہوے ابھی ساڑھے چودہ سوسال توہوے ہیں،تو یہ پچھلے دوہزار سال ...

مزید پڑھیں »

فسادات کی بنیادحرام خوری ہے : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

عالمی شیطانی منصوبہ سازصیہونی،جنہوں نے اپنے انبیاء کے دورمیں بھی اپنی شیطنت کو پھیلانے کے لیے جھوٹ اور حرام خوری کو ذریعہ بنایا یہ وہ پہلی قوم ہے جس نے اپنے نبی کے خلاف ایک فاحشہ عورت کو مال دے کرکہا تم موسیٰ علیہ السلام کی محفل میں کہنا کہ ...

مزید پڑھیں »

حرفِ تمنا جسے کہہ نہ سکیں روبرو : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم اسلام وہ واحددین ہے جس نے انسان کے اظہارِ حق پرکوئی پابندی نہیں لگائی،انسان حق مانگ سکتا ہے، انسان حق بتا سکتا ہے، انسان حقائق پوچھ سکتا ہے،لیکن باوجود اس کے جب انسان اناالحق کہہ دے تو دار پر چڑھ جاتا ہے، کیوں اس لیے کہ ...

مزید پڑھیں »

صحافت اورصحافتی تنظیمیں : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

صحافت آج کی دنیا سے پہلے بھی دنیا میں موجود تھی،اور صحافت ایک ازلی شعور کا نام ہے،جو کسی انسان کو فطری طور پر عطاہوتا ہے،باقاعدہ پرنٹ اورالیکٹرانک میڈیا کے وجود سے پہلے بھی فطری صحافی شاعری اور آفسانہ نویسی کی صورت میں صحافت کرتے تھے، انہیں شاعر، آفسانہ نویس،اور ...

مزید پڑھیں »

تم کواسلاف سے کیانسبتِ روحانی ہے؟ قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم ہندوستان میں اسلام کی تبلیغ وترویج واقعتا اہل صفا اولیاء اللہ کے ہی مرہونِ منت ہے،محمدبن قاسم کے بعد محمود غزنوی کا ہندوستان پر فوجی حملہ بھی کسی ولی کی نظر کرم کا مرہونِ منت تھا، اس کے علاوہ مغلیہ سلطنت اور دوسرے لوگ بھی سارے ...

مزید پڑھیں »

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم پاکستان کی غریب عوام اورامیر اشرافیہ کی پوری داستان اس مصرع کے اندر سموئی ہوئی ہے،پاکستان کے وجود پذیر ہونے کے ساتھ ہی غریب اور محبِ اسلام عوام آگ اور خون کے دریا عبور کرکے کٹے پھٹے، بچھڑے اجڑے، بھاگتے گھسٹتے، جب اس حدوداربعہ کے اندرداخل ...

مزید پڑھیں »

کچھ بھی نہ کہا کچھ کہہ بھی گئے : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم صحافت اور شاعری پرانے زمانے سے جاری ہے، بادشاہوں والیانِ ریاست نوابوں اور امیروں کے دروازے شعراء اور قصیدہ خوانوں،علماء اور دانشوروں  کے لیے کھلے رہتے تھے۔ہر بیان باز جگت باز اور میراثی کسی نہ کسی دربار،راجدھانی،حویلی سے منصوب ہوتا تھا،بڑے بڑے شعراء فردوسی اور مرزا ...

مزید پڑھیں »

الارض للہ! قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم علامہ اقبال نے  اپنے مجموعہ ”بالِ جبریل“  میں درجِ بالاعنوان سے ایک نظم لکھی ہے۔جس کا پس منظر شاید مزارعت ہے،کہ علامہ نے اس کے مقطع میں فرمایاہے۔ ”دہ خدایا یہ زمیں تیری نہیں تیری نہیں،تیرے آباکی نہیں تیری نہیں میری نہیں “ دہ خدا،نمبردار، ضلع ...

مزید پڑھیں »

 اس سے پہلے کہ کچھ نہ رہے : قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم پاکستانی غریب عوام جو قبل ازپاکستان بھی انہیں حالات میں تھی،سکھوں نے گھروں پر پہرے لگا رکھے تھے کہ مسلمان گندم نہ کھائیں،وہ رات کو گھروں میں گھس کر چکیوں کوچیک کرتے تھے اگر کسی کی چکی سے گندم برآمدہوجائے تو اسے سزادی جاتی تھی، انگریزوں ...

مزید پڑھیں »

باغ  اجاڑیں اونٹ، پابندی بکریوں پر: قاری محمدعبدالرحیم

آنکھ سے چھلکاآنسو اورجا ٹپکا شراب میں : قاری محمدعبدالرحیم

تحریر : قاری محمدعبدالرحیم پاکستان میں نہ وسائل کی کمی ہے نہ شعور کی،لیکن پاکستان اس کے باوجود ایک نشانِ عبرت بنتا جارہا ے۔اس لیے کہ یہ ملک بنانے والوں نے ایک نظرئیے کو اپنا منشور بنایا لیکن ملک بننے کے بعد والوں نے نظرئیے کو دفن کردیا اورپھر وہی ...

مزید پڑھیں »